Tuesday, 05 March 2024, 09:46:30 am
بھارتی فوجیوں نے راجوری میں کشمیری نوجوان کو شہید کر دیا
November 22, 2023

غیر قانونی طور پر بھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی میں آج ضلع راجوری میں ایک کشمیری نوجوان کو شہید کر دیا۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق فوجیوں نے نوجوان کو ضلع کے علاقے کالاکوٹ میں محاصرے اور تلاشی کی ایک کارروائی کے دوران شہید کیا۔

بھارتی پولیس نے آج سرینگر کے علاقے بمنہ میں تلاشی کارروائی کے دوران ممتاز احمد لون اور جہانگیر احمدنامی دو نوجوانوں کو گرفتار کر لیا۔دریں اثنا نریندر مودی کی زیر قیادت بھارتی حکومت نے کشمیری ملازمین کے خلاف جاری مہم میں آج مزید چار سرکاری ملازمین کو برطرف کردیا۔ اگست 2019 میں مودی حکومت کی جانب سے جموں و کشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کے بعد برطرفی کے عمل کو تیز کیا گیا۔ اب تک جدوجہد آزادی سے وابستگی کی بنیاد پر قابض حکام سینکڑوں ملازمین کو برطرف کر چکے ہیں۔ادھرواشنگٹن میں منعقدہ ایک اجلاس میں کشمیری تارکین وطن کے رہنمائوں نے جموں و کشمیرمیں آبادی کے تناسب کو تبدیل کرنے کے مودی حکومت کے منصوبے کا مقابلہ کرنے کے لیے ایک مضبوط پالیسی تیار کرنے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ اجلاس کی میزبانی آزاد جموں وکشمیر کے صدر کے مشیر سردار ظریف خان نے کی اور اس کی صدارت معروف کمیونٹی رہنما شفیع خان نے کی۔ ورلڈ فورم فار پیس اینڈ جسٹس کے چیئرمین ڈاکٹر غلام نبی فائی نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارت کے استعماری حکمرانوں کی طرف سے مقبوضہ علاقے کے عوام کو اپنی بقا کے خطرے کا سامنا ہے۔